Momin Khan Momin Sad Poetry

Momin Khan Momin


We present the famous collection of Momin Khan Momin poetry, Momin Khan Momin poetry is popular among those who like to read good poetry, Momin Khan Momin was a great urdu poet.






Wo aay hain pasheman laash pr ab
Tujhy aay zindagi laun kahan se

وہ آئے ہیں پشیماں لاش پر اَب
تجھے اے زندگی لاؤں کہاں سے




Hal e dil yaar ko likhon kyun kar
Haath dil se juda nahi hota

حالِ دل یار کو لکھوں کیوں کر
ہاتھ دل سے جُدا نہیں ہوتا




Momin khuda k wasty aisa makan na chood
Dozakh me daal khuldko ku e butan na chood

مومنؔ خدا کے واسطے ایسا مکاں نہ چھوڑ
دوزخ میں ڈال خُلد کو کوئے بُتاں نہ چھوڑ




Ho gaya raaz e ishq be parda
Usne pardy se jo nikala munh

ہوگیا رازِ عشق بے پردہ
اس نے پردے سے جو نکالا منہ




Soz e gham se ashk ka ik ik qatra jal gaya
Aag pani me lagi aisi keh dariya jal gaya
 
سوزِ غم سے اَشک کا اِک اِک قطرہ جَل گیا
آگ پانی میں لگی ایسی کہ دریا جَل گیا




Raaz e nihan zaban e aghyar tak na pahuncha
Kiya ik bhi hamara khat yaar tk na pahuncha

رازِ نہاں زبانِ اغیار تک نہ پہنچا
کیا اِک بھی ہمارا خط یار تک نہ پہنچا




Kiya jaany kiya likha tha use iztraab me
Qasid ki laash aai hay khat k jawab me

کیا جانے کیا لکھا تھا اسے اضطراب میں
قاصد کی لاش آئی ہے خط کے جواب میں




Tum mary pass hoty ho Goya
Jab koi dosra nahi hota

تم میرے پاس ہوتے ہو گویا
جب کوئی دوسرا نہیں ہوتا



Ho gaye naam e butan sunty hi Momin be qarar
Ham na kahty thy keh hazrat parsa kahny ko hain

ہو گئے نامِ بُتاں سنتے ہی مومنؔ بے قرار
ہم نہ کہتے تھے کہ حضرت پارسا کہنے کو ہیں



Go kah ham safha e hasti pe thy ik harf e ghalat
Lakin utthe bhi to ek naqsh bitha kr uthe

گو کہ ہم صفحہِ ہستی پہ تھے اِک حرفِ غلط
لیکن اُٹھے بھی تو اِک نقش بٹھا کر اُٹھے




Paiham sujud pa e sanam pr dam e wida
Momin khuda ko bhool gaye iztraab me

پیہم سجود پائے صنم پر دمِ وداع
مومنؔ خُدا کو بھول گئے اضطراب میں



Tab e nazara nahi aaina kiya dakhny don
Aur ban jaenge tasveer jo hairan honge

تابِ نظارہ نہیں آئینہ کیا دیکھنے دوں
اور بن جائینگے تصویر جو حیراں ہونگے



Roya karenge aap bhi pahron isi trah
Atka kahen jo aapka dil bhi meri trah

رُویا کرینگے آپ بھی پہروں اسی طرح
اٹکا کہیں جو آپ کا دل بھی میری طرح



Ksi ka hua aaj kal tha ksi ka
Na hay tu ksi ka na hoga ksi ka

کسی کا ہوا آج کل تھا کسی کا
نہ ہے تو کسی کا نہ ہو گا کسی کا 



Shab jo masjid me ja phanse Momin
Raat kati khuda khuda kr k

شب جو مسجد میں جا پھنسے مومنؔ
رات کاٹی خدا خدا کرکے 



Haath tuten maine gar chedi hun zulfein aapki
Aapke sar ki qasam bad e saba thi main na tha

ہاتھ ٹوٹیں میں نے گر چھیڑی ہوں زُلفیں آپکی
آپکے سر کی قسم بادِ صبا تھی میں نہ تھا 



Hy kuch to baat Momin jo cha gai khamoshi
Kis but ko dy diya dil kun but se ban gaye ho

ھے کچھ تو بات مومنؔ جو چھا گئی خاموشی
کس بُت کو دے دیا دل کیوں بُت سے بن گئے ہو 



Us naqsh e pa k sajdy ne kiya kya kya zaleel
Main kocha e raqeeb me bhi sar k bal gaya

اس نقشِ پا کے سجدے نے کِیا کیا کیا ذلیل
میں کوچہِ رقیب میں بھی سر کے بل گیا



Thi wasl me bhi fikr e judai tamam shab
Wo aay to bhi neend na aai tamam shab

تھی وصل میں بھی فکرِ جدائی تمام شب
وہ آئے تو بھی نیند نہ آئی تمام شب 



Umar to sari kati ishq e butan me Momin
Akhri waqt me kiya khak musalman honge

عمر تو ساری کٹی عشقِ بُتاں میں مومنؔ
آخری وقت میں کیا خاک مسلماں ہوئنگے